انتداب

کہاں فرشتہ تہذیب کی ضرورت ہے
نہیں زمانہ حاضر کو اس میں دشواری
جہاں قمار نہیں زن تنک لباس نہیں
جہاں حرام بتاتے ہیں شغل مے خواری
بدن میں گرچہ ہے اک روح ناشکیب و عمیق
طریقہ اب و جد سے نہیں ہے بیزاری
جسور و زیرک و پردم ہے بچہ بدوی
نہیں ہے فیض مکاتب کا چشمہ جاری
نظروران فرنگی کا ہے یہی فتوی
وہ سرزمیں مدنیت سے ہے ابھی عاری
علامہ محمد اقبال
مارچ ۲۰۱۹
ضرب کلیم اردو زبان میں شاعری کی ایک کتاب ہے جو عظیم شاعر، فلسفی اور پاکستان کے قومی شاعر علامہ اقبال کی تصنیف ہے۔ یہ کتاب 1936ء میں ان کی وفات سے صرف دو سال قبل شائع ہوئی۔